خالد لودھی

کیا قوم کو اب انصاف مل پائےگا؟

خالد ایچ لودھی ہمیشہ عروج کو زوال اور زوال کو عروج ہوتا ہے لیکن انسان اپنے عروج پر بھول جاتا ہے کہ زوال کو بھی آنا ہے۔ شریف اور زرداری خاندان دونوں ہی پر اب زوال کے آثار بڑے واضح ہیں۔ میاں نواز شریف کی ذات سیاسی منظر نامے سے ہٹ جائے تو پھر دونوں بھائیوں کی اولادوں کے درمیان چپقلش یقینی نظر آرہی ہے۔ اسی طرح کی صورتحال اب آصف علی زرداری کے ساتھ بھی ہے۔ یعنی ”بھٹوز“ کی تصویر کے سہارے آخر کب تک ، بلاول زرداری کو”بھٹو“ بنانے کی کوششیں کی جاتی رہیں گی۔ سیاستدانوں کو ہمیشہ…
Continue Reading »
خالد لودھی

جو بچا ہے وہ پھر سے کھانے کیلئے آ!!!

خالد ایچ لودھی چور ، ڈاکو ، جب ہیروبن جائیں تو پھر سیاست کے رنگ ہی نرالے ہوجاتے ہیں، تبھی تو پھر ”مک مکا“ اور ”ڈیل“ کی باتیں ہوتی ہیں، کچھ نہ کچھ تو ضرور ہے کہ جس کی پردہ داری ہے ۔ نوکرشاہی کے بڑے بڑے بابو آج طاقت کا سرچشمہ ہیں ، یہ وہ بابو ہیں جو گزشتہ دس سال سے میرٹ کی دھجیاں اڑاتے ہوئے حکومتی اداروں کے اعلیٰ عہدوں پر فائز ہیں، یہ آج ہمارے ”بیورو کریٹس“ ٹھہرے ۔ ان کی خصوصیت یہ ہے کہ پاکستان کے دو خاندانوں ”زرداری “ اور ”شریف برادران“ کی ذاتی…
Continue Reading »
خالد لودھی

سچ تو یہ ہے کہ دونوں ہی سچ بول رہے ہیں!!!

خالد ایچ لودھی اِن دنوں شریف برادران اور آصف علی زرداری جو کچھ کہہ رہے ہیں یہ سچ ہے ....یعنی دونوں طرف سے ایک دوسرے کو کرپٹ کہا جارہا ہے ، یہ وہ جملہ ہے کہ جس پر ان دونوں کو جھوٹا نہیں کہا جاسکتا ۔ اقتدار ، دولت اور اختیار انسان کو کیسے ایکسپوز کردیتے ہیں ، آج آصف علی زرداری اور میاں نواز شریف نے جہاں سے اپنا سیاسی سفر شروع کیا تھا آج دونوں وہیں جا کھڑے ہوئے ہیں ۔ 2007ءمیں لندن میں محترم بے نظیر بھٹو اور میاں نواز شریف کے درمیان جو میثاق جمہوریت طے…
Continue Reading »
خالد لودھی

پاکستانی سیاست میں سی آئی اے کا خفیہ کردار!!!

خالد ایچ لودھی تھنک ٹینک ہڈسن انسٹی ٹیوٹ کے ڈائریکٹر‘ امریکا میں پاکستان کے سابق سفیر اور آصف علی زرداری اور میاں نواز شریف کے سابق دست راست حسین حقانی کے واشنگٹن پوسٹ میں شائع ہونے والے مضمون کو پڑھا ہے۔ اس مضمون میں حسین حقانی نے کہاہے کہ انہوں نے صدر اوباما کے اقتدار میں آنے سے پہلے ہی اپنا تعلق ان کی انتظامیہ کے اہم لوگوں کے ساتھ مضبوط بنالیا تھا یعنی ری پبلکن پارٹی کے لوگوں کے علاوہ امریکی سی آئی اے کے اہم افراد سے بھی ان کے قریبی تعلقات استوار ہوچکے تھے۔ حسین حقانی اس…
Continue Reading »
خالد لودھی

سیاست، سفارت اور صحافت میں منظورِ نظر مافیا کے کمالات

خالد ایچ لودھی پاکستان میں حکومت جمہوری ہو یا فوجی ان دونوں ادوار میں حکمرانوں نے اپنے منظور نظر سیاستدانوں، صحافیوں اور بیورو کریٹس کو بھرپور انداز میں خوب استعمال کیا ہے ، اس کا نتیجہ یہ ہے کہ اب سیاست، سفارت اور صحافت میں مضبوط مافیا نے اپنی جڑیں مضبوط تر بنالی ہیں ۔ مثلاً کھیل کا میدان ہو تو پھر کرکٹ میں ”نجم سیٹھی“ کا نام آتا ہے ، سفارت کے میدان میں ڈاکٹر ملیحہ لودھی ، واجد شمس الحسن، شیری رحمن اور عطا الحق قاسمی کے علاوہ اب ایک اور نام حسین حقانی کا آتا ہے جب…
Continue Reading »
خالد لودھی

پاکستان کو بے وفائی کا امریکی طعنہ!!!

خالد ایچ لودھی امریکی کانگریس کے ایوان نمائندگان میں ایک پاکستان مخالف بل پیش کیاگیا ہے جو کانگریس کے بااثر رکن ٹیڈ پو نے جمع کرایا ہے ۔ ٹیڈ پو کا تعلق ری پبلکن پارٹی سے ہے اور انہو ںنے گزشتہ سال بھی پاکستان مخالف بل پیش کیا تھا لیکن وہ صدر اوباما کے آخری دن تھے اس لیے اس بل پر بحث نہیں ہوسکی ۔بل کی خاص بات یہ ہے کہ پاکستان کو جو شکایتیں امریکا سے ہیں وہ ٹیڈ پو نے پاکستان کے سرمنڈھ دی ہیں ۔ مثال کے طور پر پاکستان کا دانشور طبقہ اور عوام کب…
Continue Reading »
خالد لودھی

دوسروں کو انتہا پسند کہنے والے خود انتہا پسند بن گئے !!!

خالد ایچ لودھی امریکا کے نئے صدر ڈونلڈ ٹرمپ انتہا پسندوں اور شدت پسندوں کے خلاف بولتے بولتے اورا ب فیصلہ کرتے کرتے خود دنیا کی نظروں میں انتہا پسند اور بنیاد پرست بن گئے ۔ ان کی امریکا فرسٹ کی پالیسی کسی ملک کے حلق سے نیچے نہیں اتر رہی ۔ اب تو یہ بھی خبر آگئی کہ ان کی ٹیم میں گیارہ یہودیوں کو خاص طور سے جگہ دی گئی ہے جس سے دنیا بھر میں پیغام جارہا ہے کہ ان کی حکومت یہودی لابی کے دباﺅ میں اور یہودی نواز ہوگی ۔ اعتدال پسندی سے تجاوز کرنے…
Continue Reading »
خالد لودھی

ہمارے بھی ہیں مہرباں کیسے کیسے!!!

خالد ایچ لودھی خواجہ محمد آصف پاکستان کے وزیر دفاع ہیں ان کے منصب کا تقاضا یہ ہے کہ وہ پاکستان کا ہر سطح پر دفاع کریں اور اس پر دہشت گردی اور دہشت گردوں کی سرپرستی کا جو الزام لگایا جارہا ہے مسترد کرنے کا کوئی موقعہ ہاتھ سے جانے نہ دیں ، خاص طور پر جب وہ بیرون ملک جاتے ہیں اور وہاں کسی کانفرنس میں شرکت کرتے ہیں تو یہ ان کی ذمے داری بنتی ہے کہ وہاں وہ پاکستان کا روشن چہرہ پیش کریں، وہ دنیا کوب تائیں کہ پاکستان تو خود شدید نوعیت کی دہشت…
Continue Reading »
خالد لودھی

ٹرمپ کی مخالفت؟

خالد ایچ لودھی اپنے ایک حالیہ مضمون میں ییل یونیورسٹی کے پروفیسر ڈیوڈ بروموش نے ڈونالڈ ٹرمپ کی مزاحمت اور مخالفت کے درمیان فرق واضح کرتے ہوئے موخر الذکر کی اہمیت پر زوردیا ہے ۔ پروفیسر کے کہنے کے منطبق مزاحمت کاعمل صرف اس وقت واقع ہوتا ہے جب ماضی کی ایک جائز حکومت عوام کے ساتھ عہد توڑ دیتی ہے لیکن یہ نکتہ ابھی تک نئے صدر تک نہیں پہنچا لیکن ڈونالڈ ٹرپ اس امر کو یقینی بنانے کے لیے اپنی بساط بھر کوشش کررہے ہیں ۔ اس سے بچنے کاطریقہ مخالفت ہے جس کی بہت سی اشکال ہیں…
Continue Reading »
خالد لودھی

”ذرا سی کوشش بڑی کامیابی منتظر “

مجیب ایس لودھی، نیویارک قصہ کہیں پڑھا تھا کہ ایک شخص سمندر کے کنارے پیدل چل رہا تھا کیا دیکھتا ہے کہ ایک شخص کوئی چیز زمین سے اُٹھاتا ہے اور سمندر میں پھینک دیتا ہے قریب گیا تو پتہ چلا کہ سمندر کے کنارے ہزاروں چھوٹی مچھلیاں پڑی ہیں سمندر کی لہر نے شاید انہیں اُٹھا کر باہر پھینک دیا تھا وہ شخص ایک ایک مچھلی کو ریت سے اُٹھا کر سمندر میں پھینک رہا تھا اسے اس شخص پر ہنسی آئی اور اس نے مچھلی پھینکنے والے شخص کو کہا عجیب بیوقوف ہو کتنی مچھلیاں بچا پاﺅ گے…
Continue Reading »